پاکستان تحریک انصاف سینئر رہنما گرفتار بعد رہا عمران اسماعیل اور عارف علوی کو کچھ دیر پہلے حراست میں لے لیا گیا تھا

na19

عمران اسماعیل اور عارف علوی بنی گالا جانے کیلئے  پہنچے تو پولیس نے ان کی گاڑی کو روک لیا اور انہیں اندر جانے کی اجازت نہیں دی گئی ۔اس موقع پر عارف علوی اور عمران اسماعیل نے پولیس سے احتجاج کیا اور دھرنا دینے کی کوشش کی جس پر پولیس نے ان رہنماوں کو دھکم پیل کر کے اور بالوں سے پکڑ کر مسافر گاڑی میں منتقل کیا اور اپنے ساتھ پولیس اسٹیشن لے گئے،کچھ ہی دیر بعد وزیر  داخلہ چودھری نثار کے حکم سے رہا کر دیا گیا  ۔عارف علوی نے میڈ یا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ گرفتاری کے دوران پولیس نے زدو کوب کیا جس سے میں زخمی ہوا ہوں ۔ان کا کہنا تھا کہ یہ جمہوریت نہیں بلکہ بد ترین آمریت کی مثال ہے جس میں ہمیں یہ بھی نہیں پتہ کہ ہمارا قصور کیا ہے ۔ادھر عمران اسماعیل نے کہا کہ ہم اجلاس میں شرکت کے لیے بنی گالا آرہے تھے،ہمیں گرفتاری کی وجہ نہیں بتا ئی گئی اور ہمارے ساتھ جنگی قیدیوں والا سلوک کیا جارہا ہے ۔انہوں نے بتا یا کہ ہمیں تھانہ سیکریٹریٹ منتقل کردیا گیا ہے

وفاقی دارالحکومت میں بنی گالا کی طرف جانے والے تحریک انصاف کے رہنما عمر چیمہ ،عارف علوی اور عمران اسماعیل کو پولیس نے گرفتار کر لیا تھا جنہیں وزیر داخلہ کے حکم پر رہا کردیا گیا

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.