تحفے میں 100 کلو سونا

ایک فرانسیسی شخص کو اپنے رشتے دار کی جانب سے ملنے والے گھر سے 100 کلو سونا ملا ہے جسے فرنیچر میں چھپایا گیا تھا۔اس نامعلوم شخص کو سونے کے چمکتے ٹکڑے فرنیچر، ململ کے کپڑوں اور باتھ روم سمیت گھر کی مختلف جگہوں سے ملے۔نیلامی کرنے والے نکولس فائرفورٹ نے خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ ‘سونے کے 5000 ٹکڑے تھے، 12 کلو سونے کی دو سلاخیں تھیں اور ایک کلو سونے کے چھوٹے چھوٹے ٹکرے تھے۔‘اس خزانے کی مالیت کا اندازہ 30 لاکھ 70 ہزار ڈالر لگایا گیا ہے۔نکولس فائرفورٹ کہتے ہیں کہ سونا اس قدر مہارت سے چھپایا گیا تھا کہ انھیں بالکل دکھائی نہیں دیا۔سونے کے سکے اور ٹکڑے تب نظر آئے جب نئے مالک نے چیزوں کو اِدھر اُدھر ہلانا جلانا شروع کیا۔ابتدا میں انھیں ایک صندوق ملا جس میں سونے کے سکے چھپائے گئے تھے اور اسے فرنیچر کے اندر رکھا گیا تھا۔انھیں اس کے بعد وسکی کی بوتلوں کا ایک ڈبا ملا جس میں نہایت مہارت سے سونا چھپایا گیا تھا۔سب سے آخر میں اس گھر میں آنے والے نئے مالک نے سونے کی سلاخیں اور ٹکڑے دیکھے۔اس کے بعد انھوں نے اپنے وکیل اور اس سارے خزانے کا حساب لگانے کے لیے ایک شخص کو بلا لیا۔اس گھر کے پہلے مالک کے سامان سے ملنے والے سرٹیفیکیٹوں کے مطابق یہ سونا 1950 سے 1960 کے دوران خریدا گیا تھا۔

تاہم انھیں اس خزانے پر 45 فیصد وراثتی ٹیکس ادا کرنا ہو گا۔اخبار لا ڈیپیچی، جس نے سب سے پہلے یہ خبر دی تھی، کا کہنا ہے کہ اس خوشی کے ساتھ ساتھ نئے مالک کو صدمہ بھی پہنچ سکتا ہے، اور وہ یوں کہ اگر اس مکان کے اصل مالک نے اپنے اثاثے ظاہر نہیں کیے.

 

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.