کاسترو کی موت افسوس ناک قرار

فیڈل کاسترو کے انتقال پر باراک اوباما اور ٹرمپ کے بیانات میں تضاد ۔۔۔ٹرمپ کا کہنا ہے کہ کاسترو دور کی ہولناکیوں کا ازالہ فوری ممکن نہیں،اوباما نےکاسترو کی موت کو افسوس ناک قرار دے دیا

ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ فیڈل کاسترو نے اپنے ہی لوگوں کو تقریباً چھ دہائیوں تک محکوم بنائے رکھا،’’کیوبا ایک مطلق العنان ریاستی جزیرہ ہے۔ مجھے امید ہے کہ کاسترو کے انتقال کے بعد یہاں کے شہری اُس خوف اور مشقت سے چھٹکارا پالیں گے، جس کا انہیں کاسترو کے دور میں سامنا تھا۔  ٹرمپ نے مزید کہا کہ  انہیں اس کا بھی یقین ہے کہ کیوبا کے باقار اور پرجوش عوام انجام کار مستقبل میں اس آزادی سے ہمکنار ہوں گے، جس کے جائز حقدار ہیں۔ٹرمپ نے مزید کہا کہ فیڈل کاسترو کے دور میں عوام کو جن المناکیوں، اموات اور درد کا سامنا کرنا پڑا ہے اس کا جلد ازالہ ممکن نہیں،لیکن میری انتظامیہ ہر ممکن کوشش کرے گی کہ کیوبا کے عوام خوشحالی اور آزادی کا اپنا سفر  بتدریج طے کر لیں۔ساتھ ہی امریکی صدر باراک اوباما نے فیڈل کاسترو کی رحلت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ امریکا اور کیوبا کے درمیان دو طرفہ تعلقات اختلافات اور سیاسی تنازعات کی بھینٹ چڑھے رہے۔ ان کا کہنا تھاکہ اس افسوس اور غم کے لمحات میں امریکی شہری کیوبن عوام کے لیے ہمدردی اور دوستی کا ہاتھ بڑھاتے ہیں۔ اوباما نےمزید کہا کہ تاریخ ہی طے کرے گی کہ اس سیاسی شخصیت نے اپنے ملک اور خطے پر کس حد تک مثبت اثرات مرتب کیے ہیں۔ ان خیالات کا اظہار امریکی صدر نے فلوریڈا میں کیا جہاں کاسترو کی موت کی خبر عام ہونے جلاوطن کیوبن عوام نے مسرت و خوشی کا پر زور انداز میں اظہار کیا ہے۔

منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کیوبا کے انتقال کر جانے والے انقلابی رہنما فیڈل کاسترو کو ایک سفاک آمر قرار دیا ہے۔ ٹرمپ کے بقول کاسترو دور کی ہولناکیوں کا ازالہ فوری ممکن نہیں۔صدراوباما نے کاسترو کی موت کوافسوس ناک قرار دے دیا

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.