عمران فاروق کو ایم کیو ایم کی اعلیٰ قیادت نے قتل کرایا، ملزم محسن علی

7

ایم کیوایم رہنماعمران فاروق کے قتل میں گرفتار ملزم محسن علی سید کےاعترافی بیان کی نقل اب تک نے حاصل کرلی ہے جس میں ملزم کا کہنا ہے کہ عمران فاروق کو قتل کرنے کا حکم متحدہ کی ہائی کمان نے دیا

ڈاکٹر فاروق قتل کیس میں گرفتار ملزم محسن علی سید نے اعتراف کیا ہے کہ اس کے ساتھی کاشف نے مقتول رہنما کے سر پر اینٹ اور سینے پر چھریوں کے وار کیےکارروائی مکمل ہونے کے بعد خالد شمیم نے فون کرکے اطلاع دی کہ ماموں کی صبح ہوگئی ہےیاد رہے کہ ماموں عمران فاروق کا کوڈ نام تھا۔اعترافی بیان میں ملزم نےکہا کہ اس نے ون پاؤنڈ شاپ سے کچن میں استعمال ہونے والی چھریاں خرید کر عمران فاروق کے گھر کے لان میں چھپائیں کیونکہ سترہ ستمبرکوبانی قائد کو سالگرہ کا تحفہ دیناتھا قتل کےبعد وہ فوری دستیاب فلائٹ کے ذریعے سری لنکاچلے گئے اور بعد میں پاکستان پہنچےجہاں سے ایک ایجنٹ کے ذریعے چمن کے راستے افغانستان داخل ہوئے اور وہاں پانچ سال گزارے ملزم نے بتایا کہ پانچ سال بعد وہ اور خالد شمیم غیر قانونی طور پر سرحد عبور کرتے ہوئے پاکستان داخلے کی کوشش میں گرفتار ہو گئے

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.