جنوبی کوریا:لاکھوں شہری سڑکوں پر نکل آئے

جنوبی کوریا کی صدر پاک گن ہے کی جانب سے اپنی سہیلی کو سیکیورٹی کلیئرنس نہ ہونے کے باوجود حکومتی دستاویزات دیکھنے کی اجازت دینے کے خلاف لاکھوں مظاہرین ان کے استعفے کا مطالبہ کر رہے ہیں۔مظاہرین نے پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے ہیں جن پر صدر کے خلاف نعرے اور استعفیٰ کے مطالبات درج ہیں ۔ مظاہرین کا کہنا ہے کہ پاک گن ہے نے اختیارات کا ناجائز استعمال کرتے ہوئے اپنی دوست کو حکومتی دستاویز دیکھنے کی اجازت دی جو غیر آئینی اور غیر قانونی اقدام ہے ۔ صدر پارک گن کا کہنا ہے کہ ان کو بہت دکھ ہے کہ اس سکینڈل کی وجہ سے صدر پارک کی مقبولیت میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے۔صدر پارک گیَن ہے نے اپنی سہیلی چوئی سون سِل کو سیکیورٹی کلیئرنس نہ ہونے کے باوجود سرکاری دستاویزات دیکھنےکی اجازت دی تھی۔
صدر کی سہیلی چوئی سون سل دھوکہ دہی اور طاقت کے ناجائز استعمال کے الزامات میں زیر حراست ہیں۔ان پر جنوبی کوریا کی کمپنیوں سے بھی بھاری رقم بٹورنے کے الزامات ہیں۔
مظاہرے کے منتظمین کا کہنا ہے کہ اس مظاہرے میں10 لاکھ افراد شامل ہیں جبکہ پولیس کا کہنا ہے کہ مظاہرین کی تعداد دو لاکھ 60 ہزار کے ہے

You might also like More from author

Leave A Reply

Your email address will not be published.